Home » تب تم بہت یاد آتے ھو(Tab tum bohat yaad atay ho)

تب تم بہت یاد آتے ھو
(Tab tum bohat yaad atay ho)

 شام کے سرمئی اندھیرں میں
جب !پرندے چہچہا تے ھیں
صبا کےنرم نرم جھونکوں سے
جب ! پتے تھر تھراتے ھیں

تب تم بہت یاد آتے ھو
پھولوں کی حسیں وادیوں میں
جب ! تتلیاں گنگناتی ھیں
صبح کی مست مست ہوائیں
جب! دل کش راگ گا تی ھیں

تب تم بہت یاد آتے ھو

ہوا کوئی خزاں کا پتا
جب اپنے سنگ اڑا لے جاتی ھے
بارش کی گرتی بوند بوند
جب زمیں کی پیاس بجھا تی ھے

تب تم بہت یاد آتے ھو

چاند ! اپنی چاندنی سے
جب چار سو سحر پھیلاتا ھے
پھولوں کی مہکی مہکی شبنم میں
جب کوئی بھنورا جھوم جاتا ھے

تب تم بہت یاد آتے ھو

پتوں کی سر سراہٹ ، سریلے
جب اپنے راگ سناتی ھے
شاھیں! آنکھ نم نم ھو جاتی ھے
جب کوئل گیت وصل کے گاتی ھے

تب تم بہت یاد آتے ھو

Poet: Shaheen Mughal

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *